سوموار، 20 جون، 2011

ڈھے جانے سے ذرا پہلے

تم یہ جو موہنجو دیکھتے ہو، جس کی چھتیں تمہیں دکھائی دے رہی ہیں تو یہ وہ نہیں جو کبھی آج سے ہزار برس پہلے تھا۔ یہ تو اب مٹی ہو رہا ہے۔

بازار بھرے ہوئے ہیں، سندھو میں کشتیاں ہیں اور گوداموں میں کنک بھری ہوئی ہے تو مٹی کیسے ہو رہا ہے؟

جس سمے کوئی شے ہمیشہ کے لئے ڈھے جانے کو ہو تو اس سے پہلے بازار بھر جاتے ہیں اور دریا میں کشتیاں ہوتی ہیں اور گوداموں میں کنک بھر جاتی ہے۔ ۔ ۔ ۔ ڈھے جانے سے ذرا پہلے۔

بہاؤ ازمستنصر حسین تارڑ سے اقتباس

1 تبصرہ:

اپنے خیالات کا اظہار کرنے پہ آپ کا شکرگزار ہوں
آوارہ فکر